سافٹ ویئر ہاؤس کے سی ای او 7 دیگر افراد کو ایف آئی اے تحویل میں لیا گیا


کراچی: ایک عدالت نے جمعرات کے روز ایک سافٹ ویئر ہاؤس کے چیف آپریٹنگ آفیسر (سی ای او) اور سات دیگر افراد کو فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی (ایف آئی اے) کی تحویل میں سات دن کے لئے ریمانڈ دے دیا۔

عدالت نے ایف آئی اے کو دو مفرور ملزمان کو جلد از جلد گرفتار کرنے کی ہدایت کی۔

یہ بھی پڑھیں: ایف آئی اے سائبر کرائم ونگ نے لاہور سے آئے ہوئے ’پانچ غیر ملکی‘ کو گرفتار کرلیا

سائبر کرائم رپورٹنگ سنٹر میں ریاست کی جانب سے دائر ایک ایف آئی آر کے مطابق ، ملزمان جعلسازی ، فراڈ اور منی لانڈرنگ میں ملوث تھے۔ یہ مقدمہ الیکٹرانک جرائم کی روک تھام ایکٹ 2016 ، پاکستان پینل کوڈ اور اینٹی منی لانڈرنگ ایکٹ کی مختلف دفعات کے تحت درج کیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: ایف آئی اے نے کریپٹوکرنسی رکھنے والے افراد کے خلاف کارروائی روکنے کو کہا

قابل ذکر ہے کہ فیڈرل انویسٹی گیشن اتھارٹی (ایف آئی اے) کو ملک سے منی لانڈرنگ کے 400 سے زائد کیس موصول ہوئے تھے۔

ایف آئی اے کی ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ “ملک میں سبکدوش ہونے والے سال 2020 کے دوران منی لانڈرنگ کے 409 واقعات رپورٹ ہوئے۔”

تبصرے

تبصرے

(tagsToTranslate) سافٹ ویئر ہاؤس سی ای او گرفتار ہوا (ٹی) ایف آئی اے (ٹی) وفاقی تحقیقاتی ایجنسی



Source link